آپ کسی اور کے دوست ہوں گے “ زلفی بخاری کی نااہلی کی درخواست پر سماعت ، چیف جسٹس وزیراعظم کے معاون پر شدید برہم ہو گئے

آپ کسی اور کے دوست ہوں گے “ زلفی بخاری کی نااہلی کی درخواست پر سماعت ، چیف جسٹس وزیراعظم کے معاون پر شدید برہم ہو گئے

لاہور ( آن لائن) سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں زلفی بخاری کی نااہلی کیلئے دائر درخواستوں کی سماعت ہوئی جس دوران زلفی بخاری پیش ہوئے ۔ چیف جسٹس ثاقب نثار نے زلفی بخاری کا بائیو ڈیٹا ، تقرری کا عمل اور اہلیتی رپورٹ طلب کر تے ہوئے کہا کہ اہم عہدوں پرتقرر قومی فریضہ ہے ۔کیس کی سماعت پانچ دسمبر تک ملتوی کر دی گئی ہے ۔تفصیلات کے مطابق دوران سماعت چیف جسٹس نے زلفی بخاری کے رویے پر اظہار برہمی کرتے ہوئے کہا کہ اپناغصہ گھرچھوڑکرآئیں، آپ کسی اور کے دوست ہوں گے،عدالت کے نہیں، اٹارنی جنرل زلفی بخاری کوان کے رویے سے آگاہ کریں،وزیراپنی من اورمنشاکے مطابق معاملات نہیں چلائے گا،ہم طے کرینگے کہ معاملات آئین کے تحت چل رہے ہیں یانہیں ۔چیف جسٹس کا کہناتھا کہ اعلیٰ عہدوں پراقرباپروری نظرنہیں آنی چاہیے اور نہ ہی بندربانٹ ہو، زلفی بخاری کی تقرری اور سمری کس کے کہنے پرتیارہوئی۔ اعزاز احسن نے کہا کہ زلفی بخاری کو آئینی عہدہ نہیں دیا گیا،

یہ بھی پڑھیں:” اس تالاب کو فوری پانی سے بھریں اور۔۔۔ “ چیف جسٹس نے حکم دیدیا

زلفی بخاری کاتقرررولزآف بزنس کے تحت ہوا، زلفی بخاری کابینہ کے رکن نہیں ہیں ۔ چیف جسٹس کا کہناتھا کہ یہ اہم نوعیت کا کیس ہے ۔عدالت نے کیس کی سماعت پانچ دسمبر تک ملتوی کر دی ہے ۔

تبصرہ کریں

Your email address will not be published. Required fields are marked *